بریکنگ نیوز

بینظیر بھٹو شہید کا قاتل کون؟؟

IMG-20180121-WA0001.jpg

تحریر : احسن رضوی
ڈپٹی سیکرٹری اطلاعات
پیپلز پارٹی لاہور

حال ہی میں طالبان کمانڈر ابو منصور عاصم مفتی نور ولی محسود کی ایک کتاب ‘انقلاب محسود’ منظرِ عام پر آئی جس میں انتہائی بے شرمی اور ڈھٹائی سے پاک سر زمین پر طالبان کی جانب سے ناپاک کارروائیوں کی تفصیل بمعہ تصاویر چھاپی گئی ہیں. 650 سے زائد صفحات پر مشتمل اس کتاب میں نہتے معصوم پاکستانیوں کے قتل، پاک افواج کے ساتھ جھڑپوں، اہلِ تشیع، ہزارہ اور اس کے علاوہ مختلف اقلیتوں کے قتل عام کی درد ناک واقعات تفصیل کیساتھ موجود ہیں.
اس کتاب میں ایک اہم باب وہ ہے جہاں مصنف نے اسلامی ممالک کی پہلی خاتون وزیراعظم اور پاکستان کی ہر دلعزیز لیڈر محترمہ بینظیر بھٹو شہید پر ہونے والے حملوں اور اُن کے پیچھے چھپے عوامل کا تزکرہ کیا ہے..
سانحہ کارساز کو قلمبند کرتے ہوئے مصنف اس بات کا اقرار کرتا ہے کہ طالبان کے تمام دھڑے اس بات پر متفق تھے کہ بینظیر بھٹو شہید، عوام اور فوج کی طاقت کو یکجا کرکے پاکستان سے انتہا پسندی اور دہشت گردی کو جڑ سے اُکھاڑنے کی صلاحیت رکھتی تھیں. اس لیے بینظیر بھٹو کو راستے سے ہٹانا بیت اللہ محسود کی اولین ترجیح تھی.
حیرت انگیز طور پر سانحہ کارساز میں بینظیر بھٹو بچ گئیں جس کی وجہ راقم الحروف نے فدائین کی جلد بازی قرار دیا. منصوبہ ساز نے فدائین کوسٹیج کے پاس تعینات کیا مگر وہ جلد بازی میں جلوس میں آ گھسے.منصوبہ ساز کون تھا؟ اس کا پتہ مصنف نے تو نہیں بتایا لیکن اگلے ہی صفحے پر سانحہ لیاقت باغ کو لکھتے ہوئے نور ولی محسود نے بینظیر بھٹو کے قتل میں ملوث منصوبہ سازوں، سہولت کاروں اور فدائین کو بے بےنقاب کردیا چاہے وہی کوئی شخصیت یا کسی شخصیت کے زیرِ نگرانی کوئی مقدس گائے.
طالبان کمانڈر کے مطابق کراچی کی نسبت لیاقت باغ پنڈی میں فدائین آسانی سے بینظیر بھٹو شہید کے انتہائی قریب رسائی حاصل کر گئے اور انہیں سو فیصد نشانہ بنانے میں کامیاب ہوئے. بقول نور ولی محسود وقت کے ڈکٹیٹر جنرل مشرف سمیت ایک مقدس گائے کی رضامندی اور سہولت کاری بھی اُس عوامی اور ہر دلعزیز لیڈر کو راستے سے ہٹانے میں پیش پیش تھی جس کا عملی مظاہرہ لیاقت باغ میں بینظیر کو دی جانے والی ناقص ترین سکیورٹی اور بعد از شہادت جائے وقوعہ کی فی الفور دُھلوائی کی صورت میں سامنے آیا.
مختصراً یہ کہ مصنف نے بینظیر بھٹو شہید کے قتل میں ملوث جنرل پرویز مشرف اور بیت اللہ محسود کی رضامندی، منصوبہ سازی اور شراکت داری کا پول کھول کر رکھ دیا.
ایسے تمام افراد جنہوں نے شاید ہی کبھی بینظیر بھٹو شہید کی روح کے ایصال ثواب کیلئے فاتحہ خوانی کی ہو مگر اُن کے قاتل کون؟ صرف اسی بات میں دلچسپی رکھتے ہوں اُن سے گزارش ہے کہ ایک مرتبہ یہ کتاب خرید کر پڑھیں تاکہ بینظیر قتل میں جنرل پرویز مشرف اور طالبان کی شراکت داری کی حقیقت کو پہچان سکیں.
قارئین کے لیے کتاب میں موجود بینظیر بھٹو شہیدکے اوپر ہونے والے حملوں کی تفصیلات کے سکرین شاٹس موجود ہیں جنہیں پڑھ کر آپ کو بلاول بھٹو زرداری کے نعرے ‘قاتل قاتل مشرف قاتل’ کی بخوبی سمجھ لگ جائے گی.

شیئر کریں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Top

blog lam dep | toc dep | giam can nhanh

|

toc ngan dep 2016 | duong da dep | 999+ kieu vay dep 2016

| toc dep 2016 | du lichdia diem an uong

xem hai

the best premium magento themes

dat ten cho con

áo sơ mi nữ

giảm cân nhanh

kiểu tóc đẹp

đặt tên hay cho con

xu hướng thời trangPhunuso.vn

shop giày nữ

giày lười nữgiày thể thao nữthời trang f5Responsive WordPress Themenha cap 4 nong thonmau biet thu deptoc dephouse beautifulgiay the thao nugiay luoi nutạp chí phụ nữhardware resourcesshop giày lườithời trang nam hàn quốcgiày hàn quốcgiày nam 2015shop giày onlineáo sơ mi hàn quốcshop thời trang nam nữdiễn đàn người tiêu dùngdiễn đàn thời tranggiày thể thao nữ hcmphụ kiện thời trang giá rẻ