بریکنگ نیوز

پیرس نامہ کچھ یہاں وہاں کی

1CF4ADB7-EA4C-4F9A-B10F-76397A075628.jpeg

تحریر یاسر قدیر

مجھے نااہل کرنے سے ملکی ترقی کا سفر رک گیا ہے ،نواز شریف

اگلے دن ایک جلسہ عام سے خطاب کرتے ھوئے سابق وزیر اعظم نواز شریف نے کہا کہ جب سے انھیں سپریم کورٹ کے پانچ ججوں نے وزیر اعظم کی کرسی سے ہٹایا ہے اس دن سے پاکستان کی ترقی کا سفر نہ صرف رک گیا ہے بلکہ پیچھے کی جانب چل پڑا ہے جیسا کہ ان کے دور حکومت میں پاکستان میں نہ صرف دودھ کی نہریں بہتی تھیں بلکہ ہر طرف امن و خوش حالی کا دور دورہ تھا اور ان کی ماضی کی حکومتوں کا تجربہ اور ان کی تجربہ کار ٹیم نے پاکستان سے بجلی کی لوڈ شیڈنگ،بیروزگاری،غربت ،احتساب ،تھانہ کچہری ،کرپشن اور عدالتی نظام سب کو ٹھیک کر دیا تھا بس اب صرف صبح آنکھ کھلنے کی دیر تھی اور عوام کو یہ سب نظر آتا لیکن ایک سازش کے تحت انھیں رات و رات وزیر اعظم کی کرسی سے نا اہل کروا دیا گیا ورنہ اس سب ترقی کے ثمرات ابھی تک عوام کو مل چکے ہوتے
ویسے لگتا ہے کہ سابق وزیر اعظم موصوف ابھی بھی کسی خواب غفلت میں ہیں جو ایسی بہکی بہکی باتیں کر رہے ہیں یا پھر انہیں کوئی بتانے والا نہیں کہ “حضور والا ” ابھی بھی پاکستان میں آپکی ہی حکومت ہے اور آپکی ہی پارٹی کا نامزد بندہ اس وقت کرسی وزیر اعظم پر براجمان ہے
اور اب جو اچانک آپ کو پاکستان کے بہت سارے مسائل نظر آ رہے ہیں جیسا کہ انصاف کے نظام کی خرابیاں اور مہنگا انصاف تو جناب عالی ! پچھلے چالیس سال سے حکومتوں میں رہ کر اگر آپ کو احساس نہیں ہو سکا کہ پاکستان میں عدالتی نظام میں کتنے سقم موجود ہیں اور کیسے ایک غریب
آدمی حصول انصاف کے لیے سالوں عدالتوں میں دھکے کھاتا پھرتا ہے اور اپنا تن دھن بیچ کر وکیلوں کی مہنگی فیسیں ادا کرتا ہے تو پھر آپ کو “خراج تحسین” پیش کرنے کو دل کرتا ہے

پانچ ججوں کی مجرمانہ خاموشی کا حساب عوام لیں گے ،مریم نواز شریف

جی ہاں ہم عوام کی طاقت سے ان پانچ ججوں کو بتلا دیں گے کہ عوام نے ان کا فیصلہ مسترد کر دیا ہے یہ بات انہوں نے ایک جلسہ عام میں عوام سے خطاب کرتے ھوئے کہی ان کا کہنا تھا یہ پانچ لوگ جج بھی تھے اور وکیل بھی خود تھے اور انھوں نے ایک لاڈلے کو کہا کہ تم سے نواز شریف نہیں نکلتا اس لیے اب ہم تمہیں دکھاتے ہیں کہ کیسے کسی وزیر اعظم کو نکالا جاتا ہے حالانکہ اس سے پہلے میرے والد نواز شریف اور چچا شہباز شریف ججوں کو قانونی طریقہ کار بتایا کرتے تھے کہ کیسے کسی کیس کا فیصلہ کرنا ہے اور کیسے کسی کیس کو سالوں کے لیے التوا میں ڈال دینا ہے اور کون سے ایسے قانونی نکات اپنانے ہیں جن کی بنیاد پر راتوں رات ہمارے خلاف کیس ختم ہوتے ہیں لیکن اس دفعہ شاید انھیں ہماری ہدایات ٹھیک طرح سمجھ نہیں آئیں جس وجہ سے لگتا ہے الٹا اثر ہو گیا ہے
خیر ویسے اب سپریم کورٹ کے ججوں کو چائیے کہ سپریم کورٹ کو تالے لگا کر بند کر دیں کیونکہ جس طرح سابق وزیر اعظم نواز شریف،ان کی بیٹی مریم نواز اور حکومتی وزیر روزانہ کی بنیاد پر سپریم کورٹ کو دھمکیاں دیتے ہیں اور برا بھلا کہتے ہیں اور آگے سے سپریم کورٹ کے کان پر جوں تک نہیں رینگ رہی تو اس سے تو یہی لگتا ہے کہ پاکستان میں قانون صرف کمزور لوگوں کے لیے ہے اوراس ملک کی اشرفیہ سپریم کورٹ کو جتنا مرضی برا بھلا یا دھمکا لے اس پر کوئی توہین عدالت کا کیس لاگو نہیں ہوتا

ہمیں اگلی حکومت بنانے کا موقع دیں تو لوٹی ہوئی ساری دولت پاکستان واپس لائیں گے ،شہباز شریف

ایک تقریب سے خطاب کرتے ھوئے پنجاب کے پانچویں دفعہ کے وزیر اعلیٰ شہباز شریف نے جوش خطابت میں کہا کہ پاکستان کی عوام ہمیں اگلی دفعہ حکومت بنانے کا موقع دیں تو وہ پاکستان سے لوٹی ہوئی تمام دولت پاکستان واپس لائیں گے کیونکہ وہ اپنی پچھلی پانچ حکومتوں میں شو بازی و ڈرامہ بازی پر زیادہ توجہ دے رہے تھے اس لیے لوٹی ہوئی دولت باہر ہی پڑی رہ گئی جس میں سے زیادہ تر دولت ان کے اپنے خاندان کی ہے “یہ بات دوران تقریر شہباز شریف صاحب کے کان میں ایک مشیر نے کہی ” کیونکہ وہ پاکستانی عوام کو بھیڑ بکریاں سمجھتے ہیں اور انھیں خوب اندازہ ہے کہ ہماری عوام ایسے پر فریب اور جعلی نعروں پر بڑے آرام سے یقین کر لیتی ہے

پیپلز پارٹی سینٹ سمیت تمام ایوانوں میں اکثریت حاصل کرے گی ،آصف علی زرداری

اس بات کا اظہار سابق صدر آصف علی زرداری نے دورہ بلوچستان کے موقع پر وزیر اعلیٰ بلوچستان اور ان کی کابینہ سے دوران ملاقات کیا جو کہ حیران کن طور پر مسلم لیگ ق سے تعلق رکھتے ہیں کیونکہ سینٹ کے الیکشنز کی آمد آمد ہے چانچہ رئیس آصف علی زرداری جو کہ خرید و فروخت میں اپنا کوئی ثانی نہیں رکھتے اور جن کے خرید و فروخت کے حیرت انگیز کارنامے مختلف ملکوں کے قانونی ماہرین کو بطور مثال سکھائے جاتے ہیں اور امید ہے کہ سائیں کی ان گونا گو خوبیوں سے پیپلز پارٹی سینٹرز کی ایک کثیر تعداد نکلنے میں کامیاب ہو جائے گی جس کا آگے چل کر پاکستانی عوام کو خوب فائدہ ہو گا اس حوالے سے ان کے ملک گیر دورے جاری ہیں جن کے ثمرات آنے والے سینٹ انتخابات میں نظر آئیں گے

کارکن جمع خاطر رکھیں اس دفعہ اسمبلی کے ٹکٹ میں خود دوں گا ،عمران خان

کیونکہ پچھلی دفعہ بھی میں نے یہی باتیں کارکنان سے کہیں تھی اس کے باوجود بہت ساری ٹکٹ غلط بندوں کو دے دی گئیں اس لیے اس بار کارکنان اطمینان رکھیں میں ساری ٹکٹس بہت سوچ سمجھ کر اور پارلیمنٹری بورڈ سے مشورہ کر کے دوں گا جس میں امید ہے کہ جہانگیر ترین اور علیم خان کے علاوہ بھی منھ دکھائی کے طور پر چند ارکان شامل ہوں گے حالانکہ میں جو بات دل میں ہوتی ہے اس کا برملا اظہار کر دیتا ہوں لیکن پتہ نہیں میڈیا کیوں میری بات کا بتنگڑ بنا کر عوام میں پیش کرتا ہے حالانکہ میرے کارکنان چیخ چیخ کر تھک گئے کہ خان صاحب ضروری نہیں کہ آپ ہر بات کا لازمی جواب دیں اور ہر موضوع پر اظہار خیال کریں کہ اس کام کے لیے اپنے نیچے موجود ٹیم کو بھی استمعال کیا جا سکتا ہے لیکن اتنا تردد کون کرے کہ یہاں بھی خان کے ارد گرد سب اچھا والوں کی قطار لگی نظر آتی

شیئر کریں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Top

blog lam dep | toc dep | giam can nhanh

|

toc ngan dep 2016 | duong da dep | 999+ kieu vay dep 2016

| toc dep 2016 | du lichdia diem an uong

xem hai

the best premium magento themes

dat ten cho con

áo sơ mi nữ

giảm cân nhanh

kiểu tóc đẹp

đặt tên hay cho con

xu hướng thời trangPhunuso.vn

shop giày nữ

giày lười nữgiày thể thao nữthời trang f5Responsive WordPress Themenha cap 4 nong thonmau biet thu deptoc dephouse beautifulgiay the thao nugiay luoi nutạp chí phụ nữhardware resourcesshop giày lườithời trang nam hàn quốcgiày hàn quốcgiày nam 2015shop giày onlineáo sơ mi hàn quốcshop thời trang nam nữdiễn đàn người tiêu dùngdiễn đàn thời tranggiày thể thao nữ hcmphụ kiện thời trang giá rẻ