بریکنگ نیوز

دھیوہیکل چینی پانڈا گوشت پر بانس کھانے کو کیوں ترجیع دیتے ہیں

Giant-Panda-hd-pictures-850x550.jpg

(خصوصی رپورٹ)

چینی سائنسدانوں نے دھیوہیکل پانڈاکی کھانے کی عادات واطوارکے حوالے سے کی گئی تحقیق کے حوالے سے ریسرچ کی تحقیقات کو پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ پانڈا کا نظام انہضام اور سامنے کے نوکیلے دانت گوشت خور جانوروں کی طرز پر ہوتے ہیں لیکن پھر بھی پانڈا گوشت کی نسبت بانس کی مختلف اقسام کھانے کو کیوں ترجیع دیتے ہیں۔ اس حوالے سے چینگڈوریسرچ بیس برائے دھیوہیکل پانڈابریڈنگ نے اپنی تحقیقات کو منظرِ عام پر پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ پانڈا گوشت کی نسبت بانس کھانے کو اسی وجہ سے ترجیع دیتے ہیں کہ جنگلات میں بانس کی بہت سے اقسام وافر انداز میں آسانی کیساتھ موجود ہوتی ہے۔ مزید براں بانس کے پودے دیگرمتماثل پودوں کے برعکس غذائیت کے اعتبار سے زیادہ سٹارچ رکھتے ہیں اور اس کے ساتھ ساتھ موسم کے اعتبار سے بانس کے بہت سے پودے مختلف اقسام کے حوالے سے بہت اہمیت کے حامل ہیں کیونکہ مختلف موسموں میں اسٹارچ کی غذائیت کے اعتبار سے اسکی کئی اقسام جنگلی نباتات میں کثرت سے موجود ہوتی ہیں۔ اور بانس کی مختلف انواع کی بہتات کی بنیادی وجہ سے پانڈا تمام تر سال بانس کھانے کو ہی ترجیع دیتا ہے۔ مزید براں سائنسی تحقیق سے پتہ چلا ہے کہ پانڈا کے فیکل سیلولوس سے توانائی حاصل نہیں کر پاتے، کیونکہ پانڈا کی آنت کے فلورا بانس کے پودوں سے سیلولوز تباہ کرنے کے قابل ہوتے ہیں یوں وہ بانس سے ہی سیلولوز حاصل کرپاتے ہیں۔ مزید سائنسی تحقیق سے یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ اسٹارچ، ہیمی سیلولوز بانس کے پودوں میں موجود پیکٹین وہ بنیادی خوراک کے اجزاء ہیں جن کی مدد سے دھیوہیکل پانڈا بانس کے پودوں کی مدد سے اپنی تونائی کی ضروریات پوری کرتے ہیں۔ بانس کے پودے میں چونکہ غذائیت کے اعتبار سے استارچ اور یہموسیلولوز کی بہت زیادہ بہتات ہوتی ہے اور سال میں چونکہ بانس کی دو فصلیں ہوتی ہے خصوصی طور پر اسوقت جس وقت دھیوہیکل پانڈااپنی مادہ سے ملتا ہے۔ یوں اسٹارچ اور ہیمی سیلولوز ان پودوں میں بہتات کی وجہ سے پانڈا جہاں اپنے دھیوہیکل وجود کو توانائی بہم پنچاتا ہے وہیں اپنی نسل کو آگے بڑھانے کے لیے وافر توانائی بھی حاصل کرتا ہے۔ اور چونکہ بانس کے پودوں کی ٹہنیاں اسٹارچ اور ہیموسیلولوز سے وافر ہوتی ہیں اسی وجہ سے میٹنگ سیزن اور توانائی کو برقرار رکھنے کے لیے دھیوہیکل پانڈا کی یہ خوراک اولین ترجیع ہوتی ہے۔تاہم موسم سرما کے آغاز سے ہی دھیہوہیکل پانڈا بانس کے پودوں کے نرم تنے کھانا شروع کر دیتا ہے کیونکہ موسمِ سرما میں بانس کے پودوں پر نرمو نازک ٹہنیاں موجود نہیں ہوتی ہیں۔ اور سال بھر ان تنوں میں اسٹارچ اور حل شدہ شوگر موجود رہتی ہے۔ واضح رہے کہ پانڈا کی خوراک کے حوالے سے یہ جزویات بین الاقوامی میگزین آف سوسائیٹی برائے مائیکروبائل ایکولوجی میں یکم فروری 2018کو شایع ہو چکے ہیں ۔۔۔

شیئر کریں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Top

blog lam dep | toc dep | giam can nhanh

|

toc ngan dep 2016 | duong da dep | 999+ kieu vay dep 2016

| toc dep 2016 | du lichdia diem an uong

xem hai

the best premium magento themes

dat ten cho con

áo sơ mi nữ

giảm cân nhanh

kiểu tóc đẹp

đặt tên hay cho con

xu hướng thời trangPhunuso.vn

shop giày nữ

giày lười nữgiày thể thao nữthời trang f5Responsive WordPress Themenha cap 4 nong thonmau biet thu deptoc dephouse beautifulgiay the thao nugiay luoi nutạp chí phụ nữhardware resourcesshop giày lườithời trang nam hàn quốcgiày hàn quốcgiày nam 2015shop giày onlineáo sơ mi hàn quốcshop thời trang nam nữdiễn đàn người tiêu dùngdiễn đàn thời tranggiày thể thao nữ hcmphụ kiện thời trang giá rẻ