بریکنگ نیوز

مری سیاحوں کے مسائل

090C63FE-046D-41E0-A1E7-4C72ACDB3FBC.jpeg

مری والوں سے معزرت کے ساتھ…

اسلام و علیکم
میرا نام عقیل عباسی ہے میں مری مال روڈ کے قریب کا رہائشی ہوں اور اسلام آباد میں MScکر رہا ہوں میں یہاں کی کشیدہ صورت حال پر جو انکشافات کر رہا ہوں وہ حلف اٹھا کر کہتا ہوں کہ سچ پر مبنی ہیں۔
میری گزارش ہے کہ اس تحریر کو بغور پڑھ کر ذیادہ سے ذیادہ شیئر کریں کیونکہ سوشل میڈیا ہی ایک واحد سہارہ ہے جس کے زریعے اس ظلم سے بچا جا سکتا ہے۔

ہوٹل مافیا کا رویہ دیکھیں تو بکنگ کے وقت انتہائی معصومیت اور خوش اخلاقی سے پیش آنے والا عملہ آپکو ہر وہ سہولت دینے کا دعوی کرتے ہیں جو آپکی ضرورت اور خواہش ہوتی ہے اور کچھ ہی دیر بعد وہی سہولیات طلب کرنے پر آپ سے وہ سلوک کیا جاتا ہے کہ آپ شرمندگی کے مارے ان کی شکایت بھی نہیں کر سکتے کیونکہ مقامی انتظامیہ کا با ریش عملہ تک ان کے ٹکڑوں پر پرورش پا رہا ہے اکثر اوقات ہنی مون پر آنے والے جوڑوں کے ساتھ انتہائی دلخراش واقعیات پیش آتے ہیں رات گئے چند افراد آپکے روم کا دروازہ بجاتے ہیں اور یہ کہہ کر آپکو ہوٹک کاونٹر پر آنے کا کہتے ہیں کہ پولیس والے آئے ہیں اور آپ کا نکاح نامہ مانگ رہے ہیں چونکہ نئی نئی شادی کی وجہ سے آپکا نکاح نامہ تصدیق کے مراحل کی وجہ سے زرہ تاخیر سےملتا ہے اور آپ شادی کے اواہل میں ہی ہنی مون پر چلے جاتے ہیں ان معاملات کو جانتے ہوے بھی یہ لوگ آپکو ہوٹل کاونٹر پر لے جا کر ہراساں کرتے ہیں اور ایک پولیس والا اور باقی ہوٹل کا عملہ آپ سے نہ صرف پیسے بٹورتا ہے بللکہ دوسرے ہی دن ہوٹل چھوڑنے پر بھی مجبور کرتا ہے اکثر جوڑوں کے ساتھ تو ذیادتی تک کے واقعات پیش آتے ہیں جنھیں یہ عزت دار گھرانوں کے جوڑے منظرعام پر نہیں لاتے۔

ہوٹل انتظامیہ کے ساتھ ساتھ ڈھابے پتھارے لگانے والے بھی کسی سے پیچھے نہیں مری اور اس سے کچھ کلو میٹر دور واقع کوہالہ کے مقام پر نیلم پوائنٹ کی صورتحال بھی انتہائی تشویش ناک ہے کھانے کا آڈر لیتے وقت سنی ان سنی کرتے ہوے آڈر سے ذیادہ کھانہ دے کر آزمانی بلندیوں والے دام لئیے جاتے ہیں مزاحمت پر آپکی عورتوں کے سامنے آپکر مارا جاتا ہے اور ان کے کپڑے کھینچے جاتے ہیں سیر گاہوں کے آس پاس بیٹھنے کی جگہوں پر بیٹھنے نہیں دیا جاتا اور بیٹھ جانے پر زبردستی کچھ آڈر لیا جاتا ہے بصورت دیگر اٹھا دیا جاتا ہے۔

میں حکومت سے اپیل کرتا ہوں کہ ان ظالمں کے ظلم سے وطن عزیز کی عوام کو بچایا جائے یہ ظالم بلوچستان اور وزیرستان کے دیشتگردوں سے ذیادہ بے غیرت اور خطرناک ہیں جو ہماری ماوں بہنوں کی عزتیں لوٹتے ہیں اور ہماری حق کی کمائی سے ہمیں محروم کرتے ہیں۔

میرا نام عقیل عباسی ہے میں مری مال روڈ کے قریب کا رہائشی ہوں اور اسلام آباد میں MScکر رہا ہوں میں یہاں کی کشیدہ صورت حال پر جو انکشافات کر رہا ہوں وہ حلف اٹھا کر کہتا ہوں کہ سچ پر مبنی ہیں۔
میری گزارش ہے کہ اس تحریر کو بغور پڑھ کر ذیادہ سے ذیادہ شیئر کریں کیونکہ سوشل میڈیا ہی ایک واحد سہارہ ہے جس کے زریعے اس ظلم سے بچا جا سکتا ہے۔
وسلام۔

شیئر کریں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Top

blog lam dep | toc dep | giam can nhanh

|

toc ngan dep 2016 | duong da dep | 999+ kieu vay dep 2016

| toc dep 2016 | du lichdia diem an uong

xem hai

the best premium magento themes

dat ten cho con

áo sơ mi nữ

giảm cân nhanh

kiểu tóc đẹp

đặt tên hay cho con

xu hướng thời trangPhunuso.vn

shop giày nữ

giày lười nữgiày thể thao nữthời trang f5Responsive WordPress Themenha cap 4 nong thonmau biet thu deptoc dephouse beautifulgiay the thao nugiay luoi nutạp chí phụ nữhardware resourcesshop giày lườithời trang nam hàn quốcgiày hàn quốcgiày nam 2015shop giày onlineáo sơ mi hàn quốcshop thời trang nam nữdiễn đàn người tiêu dùngdiễn đàn thời tranggiày thể thao nữ hcmphụ kiện thời trang giá rẻ