بریکنگ نیوز

جمہوریت کی زنجیر بےنظیر بھٹو


۔۔۔۔سفرندیم زھری کوئٹہ

سیاست اور جمہوری زہنوں میں سیاسی جمہوری معاشرتی امن استحکام کے لیے جدوجہد کرنے والی اور جزبہ انسانیت پیدا کرنے والی اہداف حاصل کرنے کی سوچ کو پروان چڑھانے والی عظیم قائد دختر مشرق شہید جمہوریت محترمہ بےنظیر بھٹو کی 67ویں سالگرھ ملک بھر میں بڑی سادگی سے باعث کرونا وبا کے منائی جارہی ہے اور جہاں جہاں جمہوریت پسند طبقات موجود ہیں وھ سب شہید بےنظیر بھٹو کی سالگرھ مناکر انکی جدوجہد کو خراج تحسین پیش کرنے میں آگے آگے ہیں
جب شب وروز کی یادستارہی ہو بےقصور آنکھوں سے آنسو چھلک رہی ہوں جب مادرشفیق کی دوپٹہ پانی کےبجائے آنسوؤں کی مالا سمندر بوند بوند سے بھگورہی ہوں یا مقدر ٹہری ہو جب حق وسچ بولنے کی صلاحیت چھینی جارہی ہو تربتوں پر گلابوں کے بجائے پہرے دکھائی دیتے ہوں تب ایک بہادر بےنظیر بھٹو کی یاد ستاتی ہے جس نے اپنی پوری زندگی مسلسل جدوجہد میں درد وکرب میں ظلم کی بھٹی کی ساعتوں میں بڑی بہادری سے صبر استقامت سے لڑتی ہوئی گزاری جمہوریت انسانیت کانام معاشرے میں زندھ رکھنے کی ابدی آبحیات کی مثال قائم کردی
انہوں نے اپنی شہادت سے باورکرائی کہ جمہوریت بہترین انتقام ہے
زندگی کا وھ لمحہ یوں ہی نہیں گزررہا جس میں بےنظیر بھٹو کی یاد نہ ستارہی ہو جنہوں نے غموں کو اپنی طاقت میں بدل ڈالی اپنے عظیم لیڈر کی استقامت کو جمہوریت بہترین انتقام میں شہادت میں بدلتے دیکھا جس نے بےوقت آمروں کے ہاتھوں اپنے عظیم والد شہید عوام زوالفقار علی بھٹو کا عدالتی قتل کو بھی خود دیکھا وھ عالم اسلام کی پہلی اسلامی خواتین وزیراعظم کا شرف بھی رکھتی ہیں
یہ سب کارنامے دخترمشرق بےنظیر بھٹو کے طویل اور صبر آزما تگ و دود اور جدوجہد کی زندھ نشانی ہیں
وھ مجسم جمہوریت انکی شخصیت مردوں اور خواتین نوجوانوں بزرگوں سب کےلیے ولولہ تازھ سرچشمہ تھیں
آمرانہ ادوار میں والد کا عدالتی قتل نوجوان بھائی کامریڈ نورچراغ نصرت بھٹو کا میت بھی اپنی ہاتھوں سے اٹھاکر ایک بہادر وجودزن کی علامت زندھ رکھی
آمریت کی چالبازیوں کی وجہ سے ناکردھ گناہوں کی سزا جمہوریت کی راھ پر چلتے ہوئے آمروں کی سزا کاٹی مگر وقت آمریت کےسامنے گھٹنے ٹیکنے کےبجائے فرعونوں کے آگے جمہوریت کا علم بلند رکھا انکی سرکوبی کےلیے جمہوریت کو آب زر کی آبحیات پلاتی رہی
زندگی چھینے والے بھول گئے کہ وھ سیاھ نقاب سیاھ دستانے خاموشی گولی سے چھپ سکتے ہیں بلکہ تمام شاہراؤں پر قتل ناحق کرنے والے قزاکوں کے مکروھ چہرے درودیواروں پر بکھری خون نے ازخود نمایاں کرتی رہی
پیپلز پارٹی کی اس عظیم قائد نے کہاں کہاں تک صبر وجمیل کو دامن گیر نہ بنارکھی تھی
آج انکی سالگرھ کے دن بحیثیت صوبائی ترجمان PYOبلوچستان چیرمین بلاول بھٹو زرداری آصفہ بھٹو زرداری بختاور بھٹو زرداری فریال تالپور سمیت سندھ بلوچستان خیبر پنجاب گلگت کشمیر سے ان سے عقیدت رکھنے والے عقیدت گزاروں کو بولان کی پتھروں سے ندیوں سے جھرنوں سے ظلم کی نگری سے خلوص بھرا مبارکباد پیش کرتاہوں
تاریخ کے اوراق کو پلٹ کر دیکھاجائے توجمہوریت گویا بےنظیر بھٹو کی آنچل تلے کردار میں پرورش پاتی ہو
جمہوری جدوجہد میں انکے خلاف کون کون سی سازش رچایا نہ گیا ہوگا۔
1988 کے انتخابات میں وھ لیاری کراچی سے الیکشن لڑرہی تھیں تو انکے خلاف کون تھے جو راتوں رات لیاری پہونچ کر انکے خلاف تمام لیاری کے امیدواروں کو متحدیکجا کرنے اور بےنظیر بھٹو کو ہرانے کی سازش کی گئی مگر پھر بھی اس کے باوجود وھ بھاری اکثریت سے جیتی انہی سوچ وفکر کے علمبرداروں نے شہید زوالفقار علی بھٹو کا عوامی حکومت رات کے پہر شب خون مارکر اور بےنظیر حکومت پر دن دیہاڑے شب خون مارکر تختہ الٹانے کا شرف آج تک عوامی ووٹ کی پامالی سے مبروز ہے
شہید بےنظیر بھٹو کی علمی سیاسی ادبی جمہوری سوچ وفکر جدوجہد سے کوئی منکر ہو ماسوائے آمرانہ سوچ کے
شہید بےنظیر بھٹو کو اقتدار سے علیحدہ رکھنے عوامی طاقت کو کچلنے ووٹ کی پامالی اور اسے روندنےکےلیے پیپلز پارٹی کے اندر اسحاق خان کی شکل صورت میں چوہدری نوں نوں رائیداد ہاؤس والے جعفر وغداروں کی بدولت سازشیں عروج کا حصہ رہی ہیں بےنظیر بھٹو پر الزام لگانےوالے انکے خلاف ہیلی کاپڑ سے بےہودھ اشتہارات چلانے والے اپنے سیاسی آمر باپ ضیاءالحق کی خام خیالی کی خالی مقبرے پر کھڑے ہوکر نشتر بازی کرنے والے بھی انکی بہادری جمہوری مفاہمت کے گرویدھ ہوگئے
بدقسمتی سے نیا پاکستان بنانے والا سویل نیازی کی بغض کی انتہا بھلا ہم جیسے جیالے کب بھلاسکیں گے جنہوں نے شہید بےنظیر بھٹو کی تعزیت کےلیے چار قل تک پڑھنے سے محرومیت کا شکار ہوکر گھبراساگیاکہ کہیں وھ آنے والے وقت میں سلیکٹ ہوکر وزیراعظم کی نشست سے محروم نہ ہو
بےنظیر بھٹو نے ہمیشہ تمام صوبوں کی موازنہ این ایف سی ایوارڈ کی برابری کا مطالبہ سے دستبردارنہ ہوسکے بلکہ وھ بلوچستان میں مشرف دور میں سابق گورنر نواب اکبر خان بگٹی کی شہادت سے جنم لینے والی آگ شعلوں کو بھڑکانے کو وفاق اور چھوٹے صوبوں آمریت جمہوریت کے راھ میں بدترین رکاوٹ قراردےکر فوری امن مزکرات کا مطالبہ کرلیا
اور مشرف دور میں مزکراتی ٹیم تشکیل پایا جس کے سربراھ نخ نخ کرنےوالے ماضی کے جمہوری حکومتوں کو سازش کے زریعے پلٹانے روندنے والوں کو سونپاگیا مگر نواب اکبربگٹی جیسےقدآور باصول باضمیر قبائلی رہنما سے مزاکراتی چوھدری برادران ان کے قدکاٹ کے برابر نہ تھے تاریخ بتاتاہے جس مزاکراتی عمل میں چوھدری برادران سربراھ ہوئے وھ پس پشت اپنی مفادات کی خاطر سازشی چالبازیوں سے مفادات کو عزیز رکھ کر کام مزکرات ناکامی کی جانب لےجانے کے سوا کچھ خیربآمد کرنہیں سکتے
مجھے یاد ہے کے بحیثیت ایک ادنی گمنام ورکر کے ناطے شہید بےنظیر بھٹو 15دسمبر 2007کو الیکشن مہم کےلیے بلوچستان کوئٹہ تشریف لائی تو انکا ائیرپورٹ پر شاندار استقبال کےبعد انہوں نے سب سے پہلے نواب بگٹی کی شہادت پر بگٹی ہاؤس فاتحہ خوانی کو پہونچے انکی دور حکومت میں انکےتعاون سے گورنر بننے والا نواب بگٹی کس طرح ایک آمر کے پیش ونظر پاکستان مخالف ہوسکتاتھا جس نے اھم بڑے عہدوں پر ملکی خدمات سرانجام دےچکاہو
پھر وھ بالاچ مری کی شہادت پر انکے بزرگ قومپرست رہنما نواب خیربخش مری سے فاتحہ خوانی کےلیے مری ہاؤس پہونچے انہوں نے کہا کہ وھ بلوچستان کے مظلوم نہتے عوام کےخلاف استعماری آپریشن کے خلاف تھے مگر بدقسمتی سے جمہوریت کو گھر بھیج کر آمریت کے طاقت کے بل بوتے وفاق کی اور صوبوں کی اکائی میں دراڑیں پیدا کرنے والے ہرگز پس پشت طاقت کے پیچھے آگ خون نفرت کی ہولی کو دیکھنے سے قاصر ہیں
انہوں نے کہا کہ ماضی میں بھی بلوچستان کے جھالوان کے بزرگ قبائلی رہنما نواب نوروزخان زھری کو بھی آمریت میں آمروں نے اپنی شکست تسلیم کرتے ہوئے قرآن کےنام مزکرات کو اپنایاگیا اور طاقت کے نشے میں چور انکو پہاڑوں سے اتارکر دھوکہ دےکر نواب نوروز زھری کو کوہلو جیل میں 89_سال عمر میں قید میں شہید کیاگیا انکے فرزندوں کو حیدرآباد سندھ جیل میں غداری کے مقدمات میں پھانسی دلاکر اس نفرت کو مزید وفاق اور آمریت کے خلاف آمروں نے خود چنگاری بناکر بلوچستان کو طاقت کے بل بوتے مکا لہرانے والے ہمیشہ کےلیے بلوچستان کی نئی نسل کو جمہوری جدوجہد اور جمہوری سوچ اور پارلیمانی سیاست سے بہت دور رکھاگیا مگر شہید بےنظیر بھٹو نے ان مسائل کاحل مزکراتی ٹیم شتکیل دے کر سنجیدھ باصول باکردار سیاسی رھنماؤں کی تمام قومپرستوں کو موازنہ نیک نیتی عمل کا مطالبہ بھی کرتی رہی
وھ ہمیشہ بلوچستان کی دکھ درد غم کو اپنا گھر سمجھ کر احساس محرومیت کے خاتمے کےلیےجدوجہد کو اولین ترجیحات میں رکھتی تھیں
وھ بگڑتی صورتحال بھی موقف دیتی رہتی تھیً
بلوچستان میں ماورائےبعدالتی قتل جبری گمشدگی کو بھی جمہوریت اوردلوں میں نفرت برپا کرنے کےسوا کوئی خاص مقاصد حاصل کرنے سے خالی قرار دےکر مذمت کرتی رہی وھ بلوچستان کے سیاسی قومپرست رہنماؤں سیاسی جمہوری ورکرز کی گرفتاری کےخلاف بھی وقت آمر سے سیاسی انتقام لینے کےبجائے مفاہمتی عمل اپنانے کا مطالبہ کیامگر بلوچستان کے عوام کو وقت فرعون نے وہاں سے ہٹ کرکے مارنے کا منصوبہ پہلے سے بنا چکا ہو وھ مکا جو ہوا میں لہرتا ہو وھ اقتدار کے نشے میں کہاں جمہوریت کو حسن قرار دےکر اپنی وژن سے ہٹتا اور بلآخر وہی ہوا جس کا خدشہ شہید بےنظیر بھٹو نے کیاتھا اور آخر کار بلوچستان میں جمہوری راھ پارلیمانی سیاست کے خلاف جو آگ مشرف دور میں لگائی گئی وھ آج بھی نظر آرہی ہے
مگر شہید بےنظیر بھٹو کی سوچ وفکر کو جمہوری طرز عمل کو اپنانے کےلیے پیپلز پارٹی کے تمام جیالوں کو یکجا متحد ہوکر جنگ لڑنے کی ضرورت ہے آپس کی تمام اختلاف بالائےطاق رکھتے ہوئے متحد ہوکر اس دن تجدید عہد کرنےکی ضررورت ہے کہ ہم سب ایک تسبیح کے دانوں کی طرح ہیں تسبیح کی نازک دھاگے سے ایک دانہ ٹوٹ جائے تو پورا تسبیح بکھر کر روندی جاتی ہے ہم کیوں الگ الگ سے لگتے ہیں جبکہ ہمارا قائد شہید بےنظیر بھٹو کا لخت جگر بلاول بھٹو ہی تو ہے منشور روٹی کپڑا مکان ہے ہم سب دشمنوں کی نظر میں نظریہ بھٹو نظریہ بےنظیر کے وارث ہیں دشمن ہمیں ایک ہی صف میں شمار کرتےہیں بےشک آپس کی ہزاروں اختلاف کیونکر نہ ہوں
آئیے شہید بےنظیر بھٹو کی سالگرھ پر عہد کریں بی بی ہم تیرے ہیں ہم تیرےتھے ہم تیرے رہینگے تب اس دن کی خوشیوں کا محور خعوشبو کا احساس یکجہتی کی صورت میں جمہوریت اور شہید رانی کی مرکز سیاست کی سیاسی طواف کرسکیں گے
ورنہ آپس کی اختلافات کا وھی نتیجہ نکلے گا کہ
لمحوں نے غلطی کی
صدیوں نے سزا پائی

شیئر کریں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Top

blog lam dep | toc dep | giam can nhanh

|

toc ngan dep 2016 | duong da dep | 999+ kieu vay dep 2016

| toc dep 2016 | du lichdia diem an uong

xem hai

the best premium magento themes

dat ten cho con

áo sơ mi nữ

giảm cân nhanh

kiểu tóc đẹp

đặt tên hay cho con

xu hướng thời trangPhunuso.vn

shop giày nữ

giày lười nữgiày thể thao nữthời trang f5Responsive WordPress Themenha cap 4 nong thonmau biet thu deptoc dephouse beautifulgiay the thao nugiay luoi nutạp chí phụ nữhardware resourcesshop giày lườithời trang nam hàn quốcgiày hàn quốcgiày nam 2015shop giày onlineáo sơ mi hàn quốcshop thời trang nam nữdiễn đàn người tiêu dùngdiễn đàn thời tranggiày thể thao nữ hcmphụ kiện thời trang giá rẻ