بریکنگ نیوز

یونائیٹڈ نیشنز ڈیولپمنٹ پروگرام پاکستان کو ڈیجیٹل کرنے میں کوشاں

IMG-20201205-WA0001.jpg

یونائیٹڈ نیشنز ڈیویلپمنٹ پروگرام (یو این ڈی پی) پاکستان میں ڈیجیٹل کے ذریعے حکومتی امور میں بہتری لانے اور رسمی طور پر ڈیجیٹل ٹرانسفارمیشن پورٹ فولیو کو آگے بڑھانے کے لیے کوشاں ہے۔ اس ایجنڈا کو آگے بڑھانے کے لیے یو این ڈی پی نے صدر پاکستان عارف علوی سے ملاقات کی ہے تاکہ حکوممت پاکستان اور یو این ڈی پی کے درمیان مستقبل میں ڈیجیٹل ٹرانسفارمیشن پر اشتراک پر بات چیت کی جا سکے۔
نیویارک ہیڈکوارٹرز میں یو این ڈی پی کے ڈیجیٹل گورنینس پر چیف ٹیکنیکل ایڈوائزر مسٹر طارق ملک ڈیجیٹل ٹرانسفارمیشن کے متعلق پہلا رسمی اور اسٹریٹجک پورٹ فولیو تخلیق کرنے کے مشن کی سربراہی کر رہے ہیں، اس مشن کا مقصد حکومت پاکستان کے ساتھ مل کر ایجنڈا آگے بڑھانا ہے۔ صدر پاکستان کے ساتھ ملاقات اس ٹرانفارمیشن کے حوالے سے ایک اہم قدم تھی۔
ملاقات کے دوران جن امور پر گفتگو کی گئی ان میں پارلیمنٹ میں ڈیجیٹل کے استعمال کے ذریعے سیکرٹریٹ اور قائمہ کمیٹیوں کا انتظام اور فیصلے کرنے کی صلاحیت کو بہتر بنانا شامل تھا۔ اس بات پر اتفاق کیا گیا کہ دونوں ایوانوں میں انفارمیشن ٹیکنالوجی کا استعمال ضروری ہے تاکہ قانون سازی کے عمل کی بہتر نگرانی اور کنٹرول کو یقینی بنایا جا سکے۔ یو این ڈی پی نے کام کے تسلسل (بزنس کانٹی نیوٹی) اور پارلیمنٹ کے ڈیجیٹل ریڈی نس اسیسمنٹ میں ٹیکنیکل سپورٹ کے ذریعے اپنی جاری حمایت کا خاکہ پیش کیا۔ طارق ملک نے صدر کو بتایا کہ یو این ڈی پی سیٹیزن انگیجمنٹ پلیٹ فارم کی تیاری میں بھی مدد کر رہا ہے جو پبلک پالیسی اور پارلیمنٹ میں آنے والے بلز کے متعلق شہریوں کی رائے جاننے کے لیے استعمال کیا جا سکے۔
عالمی وبا کے دوران یو این ڈی پی پاکستان پہلے ہی ڈیجیٹلائزیشن کے حوالے کام کر رہا ہے تاکہ بہتر کارکردگی اور شمولیت کے ذریعے تسلسل اور مداخلت کے عمل کو یقینی بنایا جا سکے۔ ڈیجیٹل ہیلتھ کے شعبے میں یو این ڈی پی نے منسٹری آف ہیلتھ سروسز ریگولیشن اینڈ کوآرڈینیشن کو مدد فراہم کی ہے اور اس کے لیے صحت کہانی کے اشتراک کے ساتھ ملک بھر میں 45 ٹیلی آئی سی یوز قائم کرنے میں مدد فراہم کی ہے۔ اس اقدام کا مقصد آئی سی یو کے ماہرین کو آئی سی یو کے میڈیکل فزیشنز کے درمیان ڈیجیٹل رابطہ قائم کرا کے طبی نگہداشت کے معیار کو انتہائی بہتر کرنا ہے۔
وزارت کو ڈیجیٹل ہیلتھ ایجنڈا آگے بڑھانے میں تکنیکی سپورٹ مہیا کرنے کے ساتھ ساتھ یو این ڈی پی مختلف حکومتی وزارتوں اور شعبوں کو سپورٹ فراہم کر رہی ہے۔ اس کے ذریعے وہ اپنے تنظیمی عمل، ڈیٹا اور نالج مینیجمنٹ، شکایات کے طریق کار، ڈیجیٹل عدالتوں کو ڈیجیٹائز کرنے کے ساتھ ساتھ نگرانی اور تشخیص کو ڈیجیٹل کر رہے ہیں۔ اس کے علاوہ یو این ڈی پی پاکستان کے نوجوانوں کو ورچوئل تربیت فراہم کر رہا ہے جس کے ذریعے وہ اعلیٰ سطح کی ڈیجیٹل مہارتیں حاصل کرنے اور ملازمت کے لیے متعلقہ پلیٹ فارمز سے منسلک ہو سکتے ہیں۔
صدر عارف علوی نے ملاقات کا آغاز یو این ڈی پی کو ڈیجیٹل پاکستان کے اقدام کی رفتار تیز کرنے میں مدد پر گرم جوشی کے اظہار کے ساتھ کیا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستانی عوام اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گیترس اور یو این ڈی پی کی گورننس ٹیم کے ایڈمنسٹریٹر ایچم سٹینر اور خاص طور پر طارق ملک کے شکرگزار ہیں کہ انہوں نے ڈیجیٹل ٹرانسفارمیشن پورٹ فولیو کو پروان چڑھانے میں پاکستان کو ترجیحی حیثیت دی۔
یو این ڈی پی کے ڈیجیٹل گورننس پر چیف ٹیکنیل ایڈوائزر طارق ملک نے کہا کہ قدرتی آفتیں یا بحران ریاست کی کمزوری کو آشکار کرتے ہیں لیکن تبدیلی کے لیے قیمتی مواقع بھی فراہم کرتے ہیں۔ کووڈ 19 کی وبا نے حکومتی طریق کار کو تبدیل کرنے اور ریاست اور شہریوں کے درمیان عمرانی معاہدے کو اختراعی ڈیجیٹل مداخلت کے ذریعے مضبوط کرنے کے لیے ایک تخلیقی لمحہ فراہم کر دیا ہے۔ پاکستان کو یہ موقع ضائع نہیں کرنا چاہیئے۔
طارق ملک نے یو این ڈی پی کی جانب سے ای پارلیمنٹ اور ڈیجیٹل کے شعبے میں دیگر اقدامات کے متعلق صدر پاکستان کی سرپرستی اور پراجیکٹ سپانسر شپ پر ان کا شکریہ ادا کیا۔ ملاقات کی کامیابی کے بعد یو این ڈی پی دیگر وزارتوں کے اور شعبوں کے ساتھ اشتراک کے ساتھ نئی اور اختراعی ڈیجیٹل خدمات فراہم کرتا رہے گا۔

شیئر کریں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Top