بریکنگ نیوز

معیاری طبی مشاورت کی فراہمی کے لیے زونگ فور جی اور صحت کہانی کا باہمی اشتراک

IMG-20200918-WA0013.jpg

پاکستان میں موبائل ار ڈیجیٹل سروسز فراہم کرنے واے معتبر ترین ادارے زونگ فور جی نے مستحق افراد کو بلامعاوضہ معیاری طبی مشاورت کے لیے معروف آن لائن ہیلتھ پورٹل صحت کہانی کے ساتھ باہمی اشتراک کر لیا ہے۔
اس باہمی اشتراک کے تحت صحت کہانی ایپ استعمال کرنے والے صارفین کو 15 سو روپے فی سیشن کے حساب سے مجموعی طور پر 18 ملین روپے لاگت کی حامل 12 ہزار مفت طبی مشاورت فراہم کی جائیں گی۔ بلامعاوضہ فراہم کیے جانیوالے ان ہیلتھ سیشنز میں سے سات ہزار کرونا بیماری کے لیے مختص کیے گئے ہیں جبکہ بقایا پانچ ہزار میں صارفین دیگر بیماریوں کے حوالے سے ماہرین سے مدد حاصل کر سکیں گے۔
پاکستانیوں کی صحت اور تندرستی زونگ فور جی کی الین ترجیحات میں نہایت اہمیت کی حامل ہے۔ صحت کہانی کے ساتھ یہ اشتراک کرونا کے وبا کے حوالے سے آگاہی کے فروغ میں بھی اہم کردار ادا کرے گی تاکہ پاکستانی عوام کرونا وبا، اسکی علامات کے سات ساتھ ویکسین کے حوالے سے اہم ترین اور ضروری معلومات سے بروقت آگاہی حاصل کر سکیں۔ اس باہمی اشتراک کے تحت آگاہی کے فروغ کے لیے خصوصی وڈیوز بنائی جائیں گی جبکہ لائیو سیشنز کا اہتمام کیا جائے گا جنھیں زونگ اور صحت کہانی کے ڈیجیٹل او سوشل پلیٹ فارمز کے ذریعے لوگوں تک پہنچایا جائے گا۔
صحت کہانی کے ماہرین کی جانب سے لائیو ہیلتھ سیشنز کا اہتمام کیا جائے گا جنھیں زونگ کے سوشل میڈیا کے ذریعے لوگوں تک مپہنچایا جائے گا۔ ان سیشنز کے دوران صارفین کرونا وبا اور دوسرے امراض کے حوالے سے ماہرین سے براہ راست سوالات بھی کر سکیں گے۔ اس کے علاوہ دن کے چوبیس گھنٹے ایک خصوصی ہیلپ لائن بھی کرونا وبا کے مریضوں کو ضروری معلومات کی فراہمی کے لیے دستیاب ہو گی۔
صحت کہانی کے ساتھ باہمی اشتراککے حوالے سے اظہار خیال۔کرتے ہوئے زونگ فور جی کے سی ای او وانگ ہوا (Wang Hua) کا کہنا تھا کہ زونگ فور جی جدید ٹیکنالوجی کے استعمال کو نہایت اہمیت دیتا ہے اور زونگ کی جانب سے رابطہ کاری کی فراہمی ہیلتھ کیئر سروسز کو مزید جاندار اور موثربنانے میں انتہائی معاون ثابت ہو گی۔ ان کامزید کہنا تھا کہ زونگ فور جی کی ٹیم مستحق لوگوں کو صحت سے متعلقہ سروسز تک رسائی میں درپیش مشکلات سے بخوبی آگاہ ہے اور ان مشکلات میں کمی کے لیے کوشاں ہیں۔ صحت کہانی کے ساتھ باہمی اشتراک کو پاکستان میں ڈیجیٹل سروسز کی فراہمی کے حوالے سے زونگ کے عزم کا عملی اظہار قرار دیتے ہوئے زونگ فور جی کے سی ای او کاکہنا تھا پاکست اس وقت کرونا کی چوتھی لہر سے نبرد آزما ہے جبکہ لاک ڈاٶن اور پابندیوں کے باعث صحت کے متعلقہ سہولیات تک رسائی ایک اہم مسئلہ ہے۔ ایسے وقت میں صحت سے متعلقہ سروسز کی آن لائن فراہمی نہایت اہمیت اختیار کر چکی ہے۔
زونگ فور جی اور صحت کہانی کے باہمی اشتراک کے حوالے سے بات کرتے یوئے صحت کہانی کی شریک بانی اور سی ای او سارہ سعید خرم نے زونگ فور جی کی جانب سے ٹیلی میڈیسن اور آن لائن ہیلتھ سروسز کی فراہمی کے حوالے سے پیش قدمی کو انتہائی مثبت قرار دیا۔ ان کا۔کہنا تھا کہ۔ زونگ کی جانب سے یہ۔اقدام مستحق طبقات کے لیے نہایے کارآمدثابت ہو گا۔ سارہ سعید خرم نے زونگ کے ساتھ پارٹنر شپ پر مسرت کا اظہار کرتے ہوئے مزید کہا کہ اس اشتراک سے پاکستانمیں ٹیلی میڈیسن کے شعبے میں انتہائی اہم پیش رفت ممکن ہو سکے گی۔
صحت کہانی اپنے 35 ای ہیلتھ کلینکس اور موبائل ایپ کے ذریعے چھ لاکھ سے زائد مشاورتی سیشنز کا انعقاد کر چکا ہے جبکہ انفرادی طور پر لگ بھگ 70لاکھ سے زائد لوگ صحت کہانی ی سروسز سے مستفید ہو چکے ہیں۔
عالمی وبا کرونا کے باعث پیدا ہونے والے نامساعد حالات میں اپنے صارفین کو بروقت آگاہی او بہترین سروسز کی فراہمی کے حوالے سے زونگ فورجی ہمہ وقت کوشاں ہے

شیئر کریں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Top